چکوال ریلوے لائن کی بحالی، توہین عدالت کی درخواست پر سماعت پانچ اکتوبر کو ہوگی

No Photo

چکوال(نمائندہ سواں نیوز)سپریم کورٹ آف پاکستان کے تین رکنی بینج میں چکوال ریلوے لائن کی بحالی کے حوالے سے دائر کی جانے والی توہین عدالت کی درخواست پر سماعت پانچ اکتوبر کو ہوگی۔ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بینچ ملک فدا لرحمن کی طرف سے دائر کی جانے والی توہین عدالت کی درخواست پر سماعت کریگا۔ گزشتہ سماعت میں سپریم کورٹ نے چیئرمین پاکستان ریلوے کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب داخل کرانے کا حکم جاری کیا تھا۔ملک فدا الرحمن نے مسز افشاں غضنفر کے ذریعے عدالت میں درخواست دائر کی کہ2009میں سپریم کورٹ آف پاکستان نے میرا کالم جوروزنامہ نوائے وقت میں شائع ہوا اس پر از خود نوٹس لیتے ہوئے سماعت شروع کی تھی، سماعت کے دوران چیئرمین ریلوے اور دیگر حکام نے عدالت عظمیٰ میں بیان حلفی داخل کرائے تھے کہ وہ جلد چکوال ،مندرہ راولپنڈی ریلوے لائن کی بحالی کاکام شروع کرنے والے ہیں جس پر سپریم کورٹ نے یہ ریلوے لائن کی بحالی فوری شروع کرنے کی ابزرویشن کیساتھ درخواست نبٹا دی تھی۔ درخواست گزار نے موقف اختیار کیا ہے کہ9سال گزرنے کے باوجود چیئرمین ریلوے نے اپنے بیان حلفی پر عمل نہیں کیا ہے اور پاکستان ریلوے عدالتی حکم پر عمل نہ کر کے توہین عدالت کے مرتکب ہوئے ہیں۔ معلوم ہو اہے کہ معروف سینئر قانون دان چیئرمین پاکستان بار کونسل کامران مرتضیٰ بھی جمعہ کے روز ہونے والی سماعت میں اس درخواست کی پیروی کریں گے۔

ٹیگز :