Advert

قطری شہزادے نے معافی مانگ لی، شریف خاندان کو خوشخبری بھی سنا دی

No Photo

چکوال (سواں نیوز)مسلم لیگ (ن) کے صدر و سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف اور وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شیف سے قطری شہزادہ حماد بن جاسم نے الگ الگ ملاقات کی جس میں دو طرفہ تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امور پرتبادلہ خیال کیا گیا ۔شہزادہ حمد بن جاسم کی قیادت میں قطر کا 13 رکنی وفد خصوصی طیارے کے ذریعے اولڈ ائیر پورٹ پہنچا جہاں سے انتہائی سخت سکیورٹی میں جاتی امراء رائے ونڈ لایا گیا ۔ قطری وفد کی نواز شریف سے ملاقات میں دونوں ممالک کے تعلقات سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وفد تین سے چار روز تک پاکستان میں قیام کرے گا تاہم کچھ ارکان آج ( جمعرات )صبح واپس اپنے ملک روانہ ہوجائیں گے۔ ذرائع نے بتایا کہ قطری وفد کی جمعہ کو پاکستان آنے کی اطلاع تھی لیکن وہ دو روز پہلے ہی پہنچ گیا۔ بعد ازاں قطری شہزادے نے وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز سے ماڈل ٹائون میں ملاقات کر کے دو طرفہ تعاون بڑھانے سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔حماد بن جاسم نے کہا کہ قطر کی پاکستان میں سرمایہ کاری حکومت کی موثر پالیسیوں کا نتیجہ ہے، اقتصادی پالیسیوں کے باعث قطر کے سرمایہ کار پاکستان کی جانب راغب ہوئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق حماد بن جاسم نے ملاقات میں شریف برادران سے اس سے قبل عدالت میں گواہی کیلئے پیش نہ ہو پانے پر معافی بھی مانگی۔ حماد بن جاسم نے شریف برادران کو یقین دہانی کروائی ہے کہ اب جب بھی ان کی ضرورت ہوئی تو وہ گواہی دینے کیلئے حاضر ہو جائیں گے۔

ٹیگز :

Advert